”محمد علی ادیبؔ‘‘، بچوں کا ایک بڑا ادیب – محبوب الٰہی مخمور

محمد علی ادیبؔ کا شمار اُن نوجوان لکھاریوں میں ہوتا ہے جنہوں نے مختلف موضوعات پر لکھا ہے۔ کہانیوں کے علاوہ انہوں نے تحقیقاتی اور معلوماتی موضوعات پر بھی طبع آزمائی کی ہے۔ مگر محمدعلی ادیبؔ کی اصل پہچان ایک ادیب کی ہے۔ انہوں نے بچوں کے لیے بہت دلچسپ اور خوبصورت تحاریر لکھی ہیں۔ اُن کی اصلاحی اور اخلاقی کہانیاں میں بچوں کے لیے کوئی نہ کوئی پیغام چھپا ہوتا ہے جس سے بچے اور بڑے کچھ نہ کچھ سیکھتے ہیں۔
محمدعلی ادیبؔ کی ایک خاص بات یہ ہے کہ وہ اپنی تحریروں میں غیر محسوس طریقے سے پیغام دیتے ہیں۔ ہمارے معاشرے میں کچھ ایسے بھی ادیب ہیں جو اپنی کہانیوں میں پانچ چھ نصحیتں زبردستی شامل کرنا اپنا فرض اولین سمجھتے ہیں مگر محمدعلی ادیبؔ ایسا نہیں کرتے. وہ کہانی میں دلچسپی کا عنصر برقرار رکھتے ہیں اور کوئی ایک چھوٹی سی خرابی کواپنی تحریر میں بیان کرتے ہوئے آگے بڑھ جاتے ہیں اور کہانی میں بار بار بچوں کو مخاطب کرتے ہوئے نہیں کہتے کہ یہ نہیں کرنا ہے۔ اب یہ بچے کاکام ہے کہ وہ اُس تحریر میں سے سیکھنے کے عمل سے گزرے۔

محمد علی ادیبؔ نے لکھنے کا آغاز 2004ء میں کیا۔ ان کی اب تک 700 تحاریر شائع ہو چکی ہیں۔ جس میں سروے رپورٹ، تجزیے، تبصرے بھی شامل ہیں۔ پاکستان بھر کے تمام رسائل میں آپ نے لکھا ہے اور متعدد ایوارڈز بھی حاصل کیے ہیں۔ محمدعلی ادیبؔ کی چار کتابیں: حیرت کا سفر، مار نہیں پیار، احساس اور پکا وعدہ شائع ہو چکی ہیں جب کہ دو کتابوں: پراسرار گڑیا اور چوں کہ چناں کہ میں ایک ایک تحریر شامل ہے۔
محمدعلی ادیبؔ کے بارے میں ڈاکٹر محمد افتخار کھوکھر، سابق انچارج شعبہ بچوں کا ادب، بین الاقوامی یونیورسٹی لکھتے ہیں کہ محمدعلی کی حدیث کہانیوں کا یہ گلدستہ بچوں کے ادب میں مفید اضافہ ثابت ہوگا۔ محمد علی کی اس کتاب کے مطالعے سے بچوں کے دل و دماغ میں محبت رسول ﷺ پروان چڑھے گی۔

میرے خیال میں محمد علی ادیبؔ نے چھوٹی چھوٹی کہانیوں کے ذریعے بڑے بڑے سبق دیے ہیں اور وہ بھی غیر محسوس طریقے سے۔ انہوں نے اب تک اپنی ہر کہانی میں اپنی تحریر کا حق ادا کیا ہے۔ ان کی مستقل مزاجی انہیں بہت جلد بڑے ادیبوں کی صف میں شامل کرا دے گی۔
محمدعلی ادیبؔ نے رضاکارانہ طور پر بہت سی ورکشاپس، سمینار، کانفرنسوں کا انعقاد بھی کیا ہے۔ ان کے انتظامی کاموں کی تعریف آج بھی لوگ کرتے ہیں اور یاد کرتے ہیں کہ وہ کیمپ یا ورکشاپس کتنی منتظم تھیں اور اُن کے بارے میں مختلف رسائل نے رنگیں اور دیگر صفحات بھی شائع کیے تھے۔

محمدعلی ادیبؔ اپنے یوٹیوب چینل Mostly Seen کے ذریعے بچوں اور بڑوں کے لیے بہت سی معلوماتی ویڈیوز بھی بنا کر اپ لوڈ کرتے رہتے ہیں۔ اُن کی ویڈیوز کی ایک خاص بات یہ ہوتی ہے کہ جو کچھ اصل ہے وہی کچھ دِکھاتے ہیں۔

2 تبصرے “”محمد علی ادیبؔ‘‘، بچوں کا ایک بڑا ادیب – محبوب الٰہی مخمور

  1. بلاشبہ محمد علی ایک بڑا ادیب ہے ۔۔۔ چند ملاقاتوں میں بہت نفیس اور بہترین انسان بھی پایا ۔۔ رب سائیں صحت دے ، قلم قوت دے اور ہمیشہ خوشی دے آمین

  2. kitaabnama kay zaryay mr. saqib butt jes tarha hosla afzai kar rahay han. ye ammar sataish kay qabil hay. MEHBOOB ELAHI MAKHMOOR

اپنا تبصرہ بھیجیں